ایشیا ء کپ میں بھارت سمیت تمام میچز میں اچھی کارکردگی پیش کرتے ہوئے ٹائٹل اپنے نام کریں گے ،حسن علی

لاہور: قومی ٹیم کے فاسٹ بالرحسن علی نے کہا ہے کہ ایشیا ء کپ میں بھارت سمیت تمام میچز میں اچھی کارکردگی پیش کرتے ہوئے ٹائٹل اپنے نام کریں گے،ٹورنامنٹ میں شریک کسی ٹیم کو آسان حریف نہیں لیں گے،ٹیسٹ کرکٹ چھوڑنے کاکوئی ارادہ نہیں ، طویل فارمیٹ میں بھی عمدہ کارکردگی دکھانا چاہتا ہوں۔انہوں نے کہا کہ ماضی میں ویرات کوہلی کی وکٹ حاصل کرنے کی خواہش ضرور ظاہر کی تھی۔ تاہم ایشیاکپ میں یہ موقع نہیں مل سکے گا لیکن امید ہے کہ مستقبل میں کبھی ان کا سامنا ضرور ہو گا،ویرات کوہلی ایک بہترین بیٹسمین ہیں، ان کی

جگہ کوئی بھی نیا پلیئرہی لے گا، نیا پلیئردباؤمیں سٹارکرکٹرجیسا کھیل پیش نہ کرسکے، اس کمزوری کا فائدہ اٹھا سکتے ہیں۔حسن علی نے کہا کہ سکواڈ میں 6پیسرز شامل کرنے کا فیصلہ سلیکشن کمیٹی نے کیا ہے، میدان میں کس کو اتارنا ہے یہ فیصلہ ٹیم مینجمنٹ کرے گی ، ان بالرز میں سے ٹیم کی ضرورت کے مطابق جس کو بھی پلیئنگ الیون میں شامل کیا گیا وہ اپنی ذمہ داریوں سے انصاف کرنے کی کوشش کرے گا، انہوں نے کہا کہ میں نے ٹیسٹ کرکٹ چھوڑنے کے حوالے سے کوئی ارادہ ظاہرنہیں کیا، طویل فارمیٹ میں بھی عمدہ کارکردگی دکھانا چاہتا ہوں، ایک سوال کے جواب میں انہوں نے کہا کہ اگر کسی پلیئر کو تینوں فارمیٹس میں ملک کی نمائندگی کرناہے تو فٹنس اعلی معیار کی ہونی چاہیے، اسی لئے میں اس معاملے میں خصوصی توجہ دیتا ہوں۔حسن علی کا مزید کہنا تھا کہ دباؤمیں کھیلتے ہوئے کارکردگی دکھانا پسند کرتا ہوں، بھارت کے خلاف میچ میں بھی بھرپورجذبے کے ساتھ میدان میں اترتے ہوئے فتح حاصل کرنے کی کوشش کریں گے، نہ صرف روایتی حریف کے خلاف بلکہ پورے ایونٹ میں اچھی کارکردگی پیش کرتے ہوئے ٹائٹل اپنے نام کرنے کیلیے پرعزم ہیں۔انہوں نے کہا کہ ایونٹ میں بھارت،، سری لنکا سمیت مضبوط ٹیموں کا چیلنج درپیش ہوگا، کسی کو بھی آسان حریف سمجھنے کی غلطی نہیں کریں گے، یو اے ای کی کنڈیشنزسے اچھی طرح آگاہ ہیں، ان کا بہتراستعمال کرتے ہوئے فتوحات سمیٹیں گے۔

شاید آپ یہ بھی پسند کریںمصنف سے زیادہ

%d bloggers like this: