روس نے تاریخ کی سب سے بڑی جنگی مشقوں کا اعلان کردیا، تیاریاں جاری

روس آج سے اپنی تاریخ کی سب سے بڑی فوجی مشقیں شروع کر رہا ہے۔ روسی وزیر دفاع سیرگئی شوئیگو کے مطابق ایک ہفتے طویل ان مشقون میں تین لاکھ فوجی حصہ لیں گے، جن میں چینی دستے بھی شامل ہیں۔ اس کے علاوہ چھتیس ہزار عسکری گاڑیاں، ایک ہزار جنگی جہاز اور اّسی بحری جہاز بھی ووسٹوک 2018 نامی ان مشقوں کا حصہ ہوں گے۔ دوسری جانب روسی حکام نے ان الزامات کو بھی رد کر دیا ہے کہ ان مشقوں سے مغربی دفاعی اتحاد کے کسی رکن ملک کی سلامتی کو کوئی خطرہ لاحق ہو گا بلکہ ان مشقوں کا مقصد روس کی جنگی استعداد میں اضافہ کرناہے۔

شاید آپ یہ بھی پسند کریںمصنف سے زیادہ

%d bloggers like this: