کیپٹن (ر)محمد صفدرکواڈیالہ جیل منتقل کردیاگیا

کیپٹن (ر) صفدر کو بکتربند گاڑی میں نیب کے ریجنل دفتر سے احتساب عدالت لایا گیااور احتساب عدالت کے جج محمد بشیر کے روبرو پیش کرکے کیپٹن (ر)صفدر کی وارنٹ گرفتاری کی تعمیل کرائی گئی۔اس موقع پرنیب کی جانب سےعدالت سے مجرم کو جیل بھجوانے کی استدعا کی گئی جس پرعدالت نےپہلےاڈیالا جیل کے نام ایک مراسلہ جاری کیااور بعدازاں کیپٹن (ر) صفدر کوجیل روانہ کردیا گیا۔ایون فیلڈریفرنس میں سزا پانےوالےسابق وزیراعظم نوازشریف کے دامادکیپٹن (ر)صفدر کی اسلام آباد کی احتساب عدالت میں پیشی کےموقع پر سکیورٹی کے سخت انتظامات کئے گئے تھے اور عدالت کے باہراسلام آباد پولیس اور ایلیٹ فورس کے اہلکاروں سمیت رینجرز کے جوان بھی تعینات تھے تاہم میڈیا کے نمائندوں کو عدالت میں داخل ہونے کی اجازت نہیں دی گئی۔دامادکیپٹن ریٹائرڈ محمد صفدر کو نیب کی ٹیم نے گزشتہ روز راولپنڈی سے ایک ریلی کے دوران گرفتارکیا تھاجبکہ گرفتاری میں نیب کو لیگی کارکنوں کی جانب سےمزاحمت کاسامناکرناپڑااورمتعدد کوششوں کے بعد بالآخر انہیں نیب آفس پہنچانے میں کامیابی ملی۔احتساب عدالت نے ایون فیلڈ ریفرنس میں دامادکیپٹن ریٹائرڈ محمد صفدر کو ایک سال قید کی سزا کا حکم سنایا تھا جبکہ اسی ریفرنس میں سابق وزیراعظم نواز شریف کو 10 سال اور مریم نواز کو 7 سال قید کا حکم دیا گیا ہے۔

شاید آپ یہ بھی پسند کریںمصنف سے زیادہ

%d bloggers like this: