چودھری نثار خودمختار،ن لیگ سے اختلافات برقرار

چودھری نثار: چودھری نثار ن لیگ کے امیدوار یا خودمختار،نہ پارلیمانی بورڈ میں آئے اور نہ ہی انہوں نے ٹکٹ کیلئے درخواست دی لیکن مختلف حلقوں سے کاغذات نامزدگی ضرور جمع کروادئیے ہیں
چودھری نثار نے اپنے حلقے تو منتخب کرلئے لیکن شیر کے نشان پر ابھی تک سوالیہ نشان لگا ہے،تو ن لیگ کے رہنما ٹکٹوں کیلئے درخواستیں بھی دے رہے ہیں،قیادت فیصلہ سازی کے عمل سے گزررہی ہےلیکن ساری صورتحال میں چودھری نثار کہیں نظر نہیں آرہے،پارٹی صدر شہباز شریف اور مریم نواز نے بھی بورڈ کے روبرو پیش ہوکر انٹریو دئیے،لیکن بگڑے نثار نے پارٹی کا ٹکٹ کٹوایا اور نہ ہی قیادت کو اعتماد میں لیاخود ہی بڑا فیصلہ لے لیا،این اے 59 پر ایک اور لیگی امیدوار انجینئر قمرالسلام بھی کود پڑے،اور مریم نواز کی حمایت کا دعویٰ کردیا،ذرائع کا کہنا ہے کہ چودھری نثار کو ٹکٹ ملا تو وہ ن لیگ کے امیدوار ہوں گے ورنہ آزاد حیثیت میں انتخابی اکھاڑے میں اتریں گے۔دلچسپ بات یہ ہے کہ چودھری نثار 2013 کے الیکشن میں پارٹی ٹکٹ بانٹنے والوں کے بورڈ کا حصہ تھے

شاید آپ یہ بھی پسند کریںمصنف سے زیادہ

%d bloggers like this: