سپریم کورٹ:ڈبہ بند غیر معیاری دودھ ،صاف پانی کیسز کی سماعت

سپریم کورٹ: سپریم کورٹ آف پاکستان کراچی رجسٹری میں چیف جسٹس کی سربراہی میں ڈبوں کے غیر معیاری دودھ کے فروخت کے کیس کی سماعت ہوئی ۔دوران سماعت چیف جسٹس نے کمیشن کو مختلف کمپنیوں کے دودھ کی جانچ جاری رکھنے کا حکم دیتے ہوئے کہا کہ  جن کمپنیوں کی رپورٹ مثبت آئی پابندی ختم کر دیں گے ،یہ ہمارے بچوں کی زندگی کا معاملہ ہے اس پر سمجوتہ نہیں کریں گے ۔چیف جسٹس نے کہا کہ اللہ کی سفارش ہے بھول جائیں کسی کی سفارش مانوں گا۔ دوسری جانب  صاف پانی کی فراہمی کیس کے سماعت کے دوران چیف جسٹس نے میئرکراچی سے استفسار کیا ، وسیم صاحب بتائیں کتنے نالے صاف ہوگئے ؟ جس پر وسیم اختر نے جواب دیا کہ کام  شروع ہوگیا ہے جامع منصوبہ بنالیا ہے ، ٹینڈر کررہے ہیں۔اس پر جسٹس فیصل عرب نے استفسار کیا  بارشیں آرہی ہیں پھر کیا ہوگا ؟ میئرکراچی نے کہا کہ پندرہ روز میں پیش رفت ہوجائے گی ، عدالت نے ٹینڈرز اور ترقیاتی کاموں میں رکاوٹ کا معاملہ واٹر کمیشن کے سامنے بھیجنے کا حکم دیتے ہوئے میئر کراچی کو نالوں کی صفائی کیلئے ایک ماہ کی مہلت دے دی

شاید آپ یہ بھی پسند کریںمصنف سے زیادہ

%d bloggers like this: