کراچی کی تاریخ کےبدترین المیہ سانحہ بلدیہ کو6سال گزرگئے

 کراچی کی تاریخ کےبدترین المیہ سانحہ بلدیہ کو6سال گزرگئے،گیارہ ستمبر2012کو بلدیہ ٹاؤن میں واقع گارمنٹس فیکٹری کوبھتہ نہ دینےپر آگ لگادی گئی تھی جس میں 289افرادزندہ جل گئےتھے۔   سانحہ بلدیہ فیکٹری کیس میں کراچی کی کئی معروف سیاسی شخصیات کو ملزم قرار دیا گیا جبکہ انسداد دہشت گردی کی عدالت نے متعدد پر فرد جرم بھی عائد کی لیکن اس ہولناک واقعہ کا مقدمہ انسداد دہشتگردی کی عدالت میں تاحال زیر سماعت ہے۔رینجرز کی جانب سے سندھ ہائی کورٹ میں جمع کرائی گئی رپورٹ میں واقعہ میں مخصوص سیاسی جماعت کے ایک گروہ کے ملوث ہونے کا انکشاف کیا گیا تھا۔ مرنےوالوں کےلواحقین اپنےپیاروں کویادکرکےآج بھی رنجیدہ ہیں جبکہ کیس التواکاشکارہونےسے وہ تاحال انصاف کےمنتظرہیں۔

شاید آپ یہ بھی پسند کریںمصنف سے زیادہ

%d bloggers like this: