ملک کے 5کروڑ سے زائد افراد 3G، 4G سروسز کا استعمال کر رہے ہیں

پی ٹی اے کی آفیشل ویب سائٹ پر دیئے گئے اعداد و شمار کے مطابق ملک کے پانچ کروڑ سے زائد افراد 3G، 4G سروسز اور سمارٹ فونز کا استعمال کر رہے ہیں۔۔۔۔۔ گلی گلی میں نوجوان اپنے حلقے میں آنے والے سیاسی رہنماؤں سے کارکردگی پر جواب طلبی کر رہے ہیں اور پھر موبائل کیمرے کی مدد سے ویڈیو سوشل میڈیا پر وائرل بھی کر رہے ہیں۔۔۔۔ سوشل میڈیا کا یہ انقلاب آئندہ الیکشن پر  بھر پور طریقے سے اثر انداز ہو سکتا ہے۔۔  عوام کا کہنا ہے کہ شعور آ گیا ہے، لیکن شعور پہلے بھی تھا، اب بس سمارٹ فون آ گیا ہے۔۔۔ عقل و شعور عوام کو سوشل میڈیا اور موبائل کیمرے نے دیا ہے۔ ۔۔۔ کسی بھی انتخابی حلقے سے کوئی بھی بندہ اپنے سوشل میڈیا اکاؤنٹ پر کسی سیاستدان سے متعلق کوئی خبر ڈال سکتا ہے اور وہ وائرل ہو کر کافی لوگوں تک پہنچ جاتی ہے۔۔۔ زیادہ اہم یہ ہے کہ سوشل میڈیا سنسر شپ سے مبرا ہے اورعوام کو وہ معلومات فراہم کی جا رہی ہیں جو کہ روایتی میڈیا متعدد پابندیوں کے باعث فراہم نہیں کر پا رہا۔۔۔۔ اس حوالے سے کئی حلقوں کا کہنا ہے کہ حالیہ وائرل ویڈیوز سیاست دانوں کو بدنام کرنے کا پرانا ہتھکنڈہ ہے۔  لیکن اس سے احتساب اور جواب دہی کا ایک پیش منظرسامنے آیا ہے اور ایک مثبت اثر یہ بھی ہے کہ الیکشن 2018 کے دن سوشل میڈیا اور سمارٹ فونز کی موجودگی میں دھاندلی کرنا آسان نہ ہوگا!

شاید آپ یہ بھی پسند کریںمصنف سے زیادہ

%d bloggers like this: