امریکی امداد کی بندش سے 1 ملین فلسطینی غذائی قلت کا شکار

فلسطین کی قومی کمیٹی برائے انسداد معاشی ناکہ بندی کے چیئرمین اوررکن پارلیمنٹ جمال الخضری نے کہا ہے کہ امریکا کی طرف سے فلسطینی پناہ گزینوں کی ریلیف ایجنسی اونروا کی امداد کی بندش سے غزہ میں ایک ملین فلسطینی غذائی قلت کا شکارہیں۔ اس کے علاوہ ابتر معاشی صورت حال کے نتیجے میں تمام شعبہ ہائے زندگی بالخصوص تعلیم، صحت، معاش اور زراعت متاثر ہو گئے ہیں۔انہوں نے عالمی برادری پر زور دیا کہ وہ فلسطینی پناہ گزینوں کو درپیش مالی مشکلات کے حل کے لیے فوری امداد فراہم کرے تاکہ غزہ اور فلسطین سمیتدوسرے ملکوں اردن، لبنان وغیرہ میں غذا، صحت اور تعلیم کے بحران پر قابو پایا جا سکے۔

شاید آپ یہ بھی پسند کریںمصنف سے زیادہ

%d bloggers like this: