بلوچستان میں چند ماہ کی وزارت اعلیٰ کیلئے دوڑ

بلوچستان: بلوچستان صوبائی اسمبلی سیکریٹریٹ کےاعلامیےکےمطابق ہفتہ13 جنوری کومنعقد ہونےوالےبلوچستان صوبائی اسمبلی کےاجلاس میں وزیراعلیٰ کا انتخاب عمل میں لایاجائےگا۔ صوبےمیں نئےقائدایوان کے لیے مسلم لیگ (ق) کے عبدالقدوس بزنجو نے کاغذات نامزدگی جمع کرادیئے۔ پشتونخوا ملی عوامی پارٹی کی جانب سے دو امیدواروں لیاقت آغا اور عبدالرحیم زیارتوال نے کاغذات نامزدگی جمع کرائے۔ بلوچستان اسمبلی میں نواب ثناء اللہ زہری کو وزیراعلیٰ کے عہدے سے استعفیٰ دینے پر مجبور کرنے والے مسلم لیگ (ن) کے ناراض اراکین اور (ق) لیگی ارکان صوبائی اسمبلی نےنئےوزیراعلیٰ کےلیے عبدالقدوس بزنجو کو اپنا امیدوار نامزد کیا تھا۔ اس سے قبل نئے وزیراعلیٰ بلوچستان کے لیے مسلم لیگ (ن) کی طرف سے ممکنہ طور پر جان محمد جمالی اور صالح بھوتانی کے نام سامنے آ رہے تھے۔ تاہم جان محمد جمالی نے ناراض لیگی رہنماؤں کے ہمراہ پریس کانفرنس کرتے ہوئے کہا کہ مسلم لیگ (ق) کے رہنما عبدالقدوس بزنجو وزیراعلیٰ بلوچستان کے لیے ہمارے متفقہ امیدوار ہیں۔ یاد رہے کہ رواں ہفتے نواب ثناء اللہ زہری نے اپنےخلاف تحریک عدم اعتمادپیش ہونےسےقبل ہی وزیراعلیٰ بلوچستان کے عہدے سے استعفیٰ دے دیا تھا۔ وزیراعظم شاہد خاقان عباسی نے بھی بلوچستان کی سیاسی صورت حال کے پیش نظر کوئٹہ کا ہنگامی دورہ کیا تھا تاہم باوجود کوشش کہ (ن) لیگ کے ناراض اراکین نے وزیراعظم سے ملنے سے انکار کردیا تھا۔

شاید آپ یہ بھی پسند کریںمصنف سے زیادہ

%d bloggers like this: