الیکشن کمیشن:تحریک انصاف کیخلاف انٹراپارٹی الیکشن ریفرنس خارج

الیکشن کمیشن: الیکشن کمیشن میں پی ٹی آئی انٹراپارٹی انتخابات کو کالعدم قرار دینے کی درخواست پر سماعت ہوئی،،حتمی دلائل سننےکےبعدالیکشن کمیشن نے انٹراپارٹی انتخابات میں مبینہ بے ضابطگیوں سے متعلق درخواست کو خارج کر دیا۔قبل ازیں سماعت کے آغازمیں درخواست گزار کے وکیل نے دلائل دیتے ہوئے کہا کہ تحریک انصاف نے پولیٹیکل پارٹیز آرڈر کی خلاف ورزی کرتے ہوئے پارٹی آئین میں غیرقانونی طریقے سے تبدیلی کی،جس سےانٹراپارٹی انتخابات مشکوک ہوگئے،دلائل مکمل ہونے پر الیکشن کمیشن نے فیصلہ محفوظ کرلیا جسے بعد ازاں سناتے ہوئے درخواست کو خارج کر دیا گیا۔ فیصلےکےبعدتحریک انصاف کےوکیل کاکہناتھاکہ ثابت ہوگیاکہ پی ٹی آئی نےشفاف طریقے سے الیکشن کروائے۔دوسری جانب تحریک انصاف کے سابق صوبائی وزیر معدنیات ضیا اللہ آفریدی کوخیبرپختونخوااسمبلی سےڈی سیٹ کرنے کیلئےالیکشن کمیشن میں دائر عمران خان کا ریفرنس بھی خارج کردیا گیا۔عمران خان نے اپنے ریفرنس میں کہا تھا کہ ضیا اللہ آفریدی نے پیپلزپارٹی میں شمولیت اختیار کرلی ہے لہٰذا انہیں تحریک انصاف کے پلیٹ فارم سے حاصل ہونے والی صوبائی نشست سے ہٹایاجائے ۔

 

شاید آپ یہ بھی پسند کریںمصنف سے زیادہ

%d bloggers like this: