گلگت بلتستان:وفاقی ٹیکسوں کے خلاف شٹرڈاؤن ہڑتال کادوسراروز

گلگت بلتستان:ود ہولڈنگ سمیت دیگر ٹیکسوں کے خلاف مرکزی انجمن تاجران کی اپیل پر پورے گلگت بلتستان میں شٹرڈاؤن ہڑتال دوسرے روز بھی جاری رہی اور علاقے کی تمام چھوٹی بڑی مارکیٹیں،تجارتی مراکز، ہوٹل اور میڈیکل سٹورز بھی بندرہےجبکہ تاجروں سے اظہارِ یکجہتی کیلئے وکلاء برادری نے عدالتوں کا بائیکاٹ کررکھا ہے جبکہ ٹرانسپورٹرز کی جانب سے پبلک ٹرانسپورٹ بند کردی گئی اس کے علاوہ گلگت بلتستان میں تعلیمی ادارے بھی بند رہے جس کے باعث تمام اضلاع میں کاروبارِ زندگی مفلوج ہوکررہ گیا اورشہریوں کو شدید مشکلات کا سامنا کرنا پڑا۔اس موقع پر مختلف علاقوں میں احتجاجی مظاہرے کئے گئے جن میں تاجروں برادری اور سول سوسائٹی کے نمائندوں نے بڑی تعداد میں شرکت کی۔تاجربرادری کا کہنا ہے کہ جب تک وفاقی ٹیکسز کا خاتمہ نہیں کردیا جاتا تب تک ہڑتال جاری رہے گی۔

شاید آپ یہ بھی پسند کریں مصنف سے زیادہ

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.