لاہور ہائیکورٹ، حج پالیسی 2018 سے متعلق متفرق درخواست کی سماعت

لاہور ہائیکورٹ: لاہور ہائیکورٹ کے جسٹس شاہد کریم نے کیس کی سماعت کی، درخواست گزاروں کےوکیل اظہر صدیق ایڈووکیٹ نے موقف اختیار کیا کہ حج پالیسی 2018 میں سپریم کورٹ آف پاکستان کے فیصلے کے باوجود نئے حج ٹور آپریٹرز کو کوٹہ نہیں دیا جا رہا،،،انہوں نے کہا کہ سپریم کورٹ آف پاکستان کے نئے حج ٹورآپریٹرز کو کوٹہ دینے کے واضح احکامات ہیں-انہوں نے کہا کہ سپریم کورٹ حج کوٹہ سے متعلق اعلی سطحی کمیٹی بھی بنانے کا حکم دے چکی ہے-حج پالیسی 2018 میں نئے حج ٹور آپریٹرز کاکوٹہ مختص نہ کیا جانا واضح طور پرتوہین عدالت ہے- انہوں نے بتایا کہ نئے حج ٹور آپریٹرز کو کوٹہ نہ دینےسے مسابقت کی فضاء پیدا نہیں ہوتی جس کی وجہ سے عازمین حج کو مشکلات کا سامنا کرنا پڑتا ہے،،،انہوں نے استدعا کی کہ عدالت سپریم کورٹ کے احکامات پر عمل درآمد ہونے تک نئی حج پالیسی پر عمل درآمد روکنے کا حکم دے- جس پر عدالت نے وفاقی حکومت اور وفاقی وزارت مذہبی امور کو پندرہ جنوری کے لئے نوٹس جاری کرتے ہوئے جواب طلب کر لیا۔

شاید آپ یہ بھی پسند کریں مصنف سے زیادہ

%d bloggers like this: