خالد مقبول صدیقی کے ٹکٹ پر رابطہ کمیٹی کے 2 امیدواروں کے کاغذات نامزدگی منظور

متحدہ قومی موومنٹ پاکستان کا پارٹی بحران مزید شدت اختیار کرگیا اور اب ایک دوسرے کے خلاف جملے بازی سے بڑھ کر بات اختیارات کو چیلنج کرنے تک جاپہنچی،سینیٹ امیدواروں کے کاغذات نامزدگیوں کی جانچ پڑتال کے موقع پر بھی دلچسپ صورتحال رہی، بیرسٹر فروغ نسیم نے صوبائی الیکشن کمشنر کو ایم کیو ایم کا آئین پڑھ کرسنایا اور کہا کہ پارٹی آئین میں واضح ہے کہ ٹکٹ جاری کرنے کا اختیار رابطہ کمیٹی کو ہے۔صوبائی الیکشن کمیشن نے سینیٹ کیلیے نسرین جلیل اور امین الحق کے کاغذات نامزدگی منظور کرلیے جنہیں ٹکٹ خالد مقبول صدیقی نے جاری کیا تھا۔جبکہ فاروق ستار کی جانب سے جاری کردہ ٹکٹ پر کامران ٹیسوری کے بھی کاغذات نامزدگی منظور کر لیے گئے بعدازاں رابطہ کمیٹی کے رکن خالد مقبول صدیقی کا کہنا تھا کہ اگر فاروق ستار کے اختیارات سے متعلق خط واپس لیتے تو کاغذات منظور نہ کرا پاتے جب کہ لیڈر اختیار نہیں اعتماد مانگتا ہے۔

شاید آپ یہ بھی پسند کریںمصنف سے زیادہ

%d bloggers like this: