حسن ،حسین نوازکیخلاف نیب ریفرنس کی سماعت کل تک ملتوی

احتساب عدالت میں سابق وزیراعظم نواز شریف کے بیٹوں حسن اور حسین نواز کے خلاف نیب کی جانب سے دائر کردہ العزیزیہ اسٹیل ملز ریفرنس کی سماعت ہوئی۔ نیب کی جانب سے حسن اور حسین نواز کو اشتہاری قرار دینے کی تعمیلی رپورٹ عدالت میں پیش کردی گئی۔ سماعت کے دوران فلیگ شپ انوسٹمنٹ ریفرنس میں تفتیشی افسر محمد کامران، العزیزیہ اسٹیل ملز کے تفتیشی افسر محبوب عالم اور ایون فیلڈ پراپرٹیز ریفرنس کے تفتیشی افسر عمران ڈوگر نے اپنے بیانات  قلمبند کرادیے۔ احتساب عدالت نے مزید سماعت کل تک ملتوی کردی جس کے باعث ملزمان کو اشتہاری قرار دینے کا عمل کل مکمل کیا جائے گا۔ عدالت نے حکم دیا کہ تفتیشی افسر ملزمان کی جائیداد قرق کرنے کا حکم نامہ آج لے کر جائیں۔ ڈپٹی پراسیکیوٹر جنرل نیب کی جانب سے حسین نواز کے چار بینک اکاؤنٹس کی تفصیل بھی عدالت میں پیش کی گئی ہیں جس کے مطابق حسین نواز کے سٹینڈرڈ چارٹرڈ بنک میں چار اکاوٴنٹس ہیں اور رقم بھی موجود ہے۔ ایک بنک اکاوٴنٹ میں 3ہزار 9 سو 92 ڈالرز اور دوسرے میں 4ہزار 2سو 72 یورو موجود ہیں۔ حسین نواز کے تیسرے بنک اکاونٹ میں 207 پاوٴنڈز اور چوتھے اکاونٹ میں 3لاکھ 82 ہزار 3 سو 81 روپے موجود ہیں۔ نیب رپورٹ کے مطابق ایل ڈی اے اور ڈی ایچ اے میں حسن اور حسین نواز کی کوئی پراپرٹی نہیں جب کہ ڈپٹی کمشنر لاہور اور بحریہ ٹاوٴن کی جانب سے جواب کا انتظار ہے۔

شاید آپ یہ بھی پسند کریں مصنف سے زیادہ

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.