پشاور: ٹریفک پولیس اہلکاروں نے معاشرے کو سدھارنے کا بیڑا اٹھا لیا

پشاور:صوبائی دارالحکومت پشاور میں وی آئی پیز کو چالان کرنے کے بعد ٹریفک وارڈن پولیس کی جانب سے رکشوں اور پبلک ٹرانسپورٹ گاڑیوں پر بنے تشدد آمیز فلمی تصاویر مٹانے کی مہم شروع کردی گئی ہے۔ پشاور میں پبلک ٹرانسپورٹ کے پیچھے پشتو فلموں کے پر تشدد مناظر کی تصاویر پینٹ کرنے کا سلسلہ عام ہے جو ہر رکشے اور بس پر بنے ہوتے ہیں۔ انہیں مٹانے کیلئے ٹریفک وارڈن پولیس نے خصوصی مہم کا آغاز کردیا ہے۔ ٹریفک پولیس اہلکار رکشوں اور بسوں کو روک کر تشدد آمیز اور فلمی تصاویر پر سیاہ اسپرے کررہے ہیں۔ شہریوں نے اس مہم کو سراہتے ہوئے کہا ہے کہ گاڑیوں پر اسلحہ اور دیگر تشدد آمیز تصاویر معاشرے میں بگاڑ کا سبب بن سکتی ہے اس لئے انہیں ہٹانا انتہائی ضروری ہے۔

شاید آپ یہ بھی پسند کریں مصنف سے زیادہ

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.