ڈیم کا پانی زہریلا ہونے سے بڑی تعداد میں مچھلیاں بھی مرنے لگیں

راول ڈیم میں نامعلوم افراد نے مبینہ طورپر زہریلا مواد ڈال دیا جس کے نتیجے میں ہزاروں مچھلیاں مر گئیں۔

زہریلے مواد کے تعین کیلئے پانی کے نمونے این آئی آر سی کو بھجوا دیئے گئے۔ ٹھیکیدار اورنگزیب نے بتایا کہ مرنے والی مچھلیوں کو زمین میں دفنایا جا رہا ہے۔ جبکہ محکمہ فشریزکی مدعیت میں مقدمہ تھانہ سکرٹریٹ میں درج کروا دیا گیا ہے،، ڈیم کا پانی راولپنڈی کے شہریوں کو پینے کیلئے بھی فراہم کیا جاتا ہے۔ ترجمان واسا کہا کہنا ہے کہ ڈیم کے پانی میں زہریلے مواد کے شوائد نہیں ملے ہیں۔۔

شاید آپ یہ بھی پسند کریں مصنف سے زیادہ

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.