پی ٹی آئی انٹراپارٹی انتخابات: الیکشن کمیشن میں دائر درخواست پر فیصلہ محفوظ

درخواست گزار کے وکیل نے موقف اختیار کیا کہ پی ٹی آئی نے ڈمی انٹرا پارٹی انتخابات کرائے، پارٹی آئین کے خلاف انتخابات کو کالعدم قرار دیا جائے۔ تحریک انصاف کے وکیل بابر اعوان نے کہا کہ انٹراپارٹی انتخابات کے خلاف دائر درخواست قابل سماعت ہی نہیں، انٹراپارٹی انتخابات کو الیکشن پٹیشن کے ذریعے چیلنج ہی نہیں کیا جاسکتا۔۔بابر اعوان کا کہنا تھا کہ درخواست گزار کا پی ٹی آئی انٹراپارٹی انتخابات سے کوئی تعلق نہیں، انٹراپارٹی انتخابات نہ کرانے پر پی ٹی آئی کا انتخابی نشان ہی روک لیا گیا تھا، انٹراپارٹی انتخابات میں ہر چیز شفاف تھی۔ دوسری جانب پی ٹی آئی کے رہنماء نعیم الحق نے کہا کہ اسحاق ڈار کو نیب کورٹ سے بچا کر وزیرخزانہ برقرار رکھا ہوا ہے۔ سپریم کورٹ سے اپیل ہےکہ ازخود نوٹس لے کرشاہد خاقان کو بھی نااہل کرے

شاید آپ یہ بھی پسند کریں مصنف سے زیادہ

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.