کوئٹہ میں فورسزنشانےپر، دھماکےمیں15جوانوں سمیت22 افراد شہید، 25 زخمی

کوئٹہ میں پشین سٹاپ کے قریب سیکیورٹی فورسز کے ٹرک پر دھماکے میں 15 فوجی جوانوں سمیت 22 افراد شہید اور 25 زخمی ہوگئے، ہسپتالوں میں ایمرجنسی نافذ۔

صوبائی دارالحکومت کے اولڈپشین سٹاپ پر زوردار دھماکا ہوا ہے جس کے نتیجے میں 22 افراد شہید اور متعدد افراد زخمی ہو گئے۔ جاں بحق افراد کی لاشیں بری طرح جھلسی ہوئی ہیں۔ ایمبولنسز نے فوری طور پر موقع پر پہنچ کر زخمیوں کو سی ایم ایچ ہسپتال کوئٹہ منتقل کردیا ہے۔ دھماکہ اس قدر شدید نوعیت کا تھا کہ اس کی آواز پورے شہر میں سنی گئی۔ دھماکے کے نتیجےمیں کئی گاڑیوں کوبھی آگ لگی۔ تاہم ریسکیو اہلکاروں نے فوری طور پر موقع پر پہنچ کر آگ پر قابو پالیا۔ دوسری جانب قریبی ہسپتالوں میں ایمرجنسی نافذ کردی گئی۔ دہشت گردوں نے آرمی کے ٹرک سے آتش گیرمواد سے بھری گاڑی کو ٹکرادیا جس سے شدیدآگ بھرک اٹھی اورکئی راہگیربھی اس کی لپیٹ میں آ گئے۔ وزیرداخلہ بلوچستان کے مطابق دھماکہ بڑی نوعیت کا ہے، تھریٹ پہلے سےموجود تھا، جس کے بعد شہرمیں ہائی الرٹ کیا گیا۔ پشین سٹاپ سے مختلف علاقوں کیلئے بسیں روانہ ہوتی ہے اور یہ شہر کا انتہائی مصروف اور گنجان آباد علاقہ ہے۔ بلوچستان ہائیکورٹ اور صوبائی اسمبلی سمیت دیگر اہم عمارات بھی جائے وقوعہ کے قریب ہیں۔

شاید آپ یہ بھی پسند کریں مصنف سے زیادہ

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.