چیئرمین سینیٹ کاانتخاب،پیپلزپارٹی کےسینیٹرزکےایوان میں نعرے

چیئرمین سینیٹ کے انتخاب کے اعلان کے موقع پر پیپلز پارٹی کے سینیٹرز نے ایوان میں زور دار نعرے لگانے شروع کر دیئے کہ ’ایک زرداری سب پے بھاری ‘اس کے علاوہ جیے بھٹو کے نعرے بھی ایوان میں گونجتے رہے جبکہ صاد ق سنجرانی کو پاکستان تحریک انصاف کی بھی حمایت حاصل تھی تاہم پی ٹی آئی کی جانب سے کوئی نعرہ ایوان میں سنائی نہ دیا۔ دوسری جانب پاکستان تحریک انصاف کےرکن قومی اسمبلی نےالزام لگایا ہےکہ سینیٹ کی گیلری میں بیٹھےایک شخص نے میراگلہ دبانےکی کوشش کی جسےمیں جانتانہیں ہوں۔ پی ٹی آئی کے رکن قومی اسمبلی حامد الحق خلیل کا کہنا ہے کہ ہال میں نواز شریف کے حق میں نعرے لگ رہے تھے تو میں نے بھی عمران خان کے حق میں بھی نعرہ لگایا جس کے بعدپاس بیٹھے ایک شخص نے مجھ سے ہاتھا پائی کی اور میرا گلہ دبانے کی کوشش کی۔بعد ازاں ن لیگی ایم این اے جعفر اقبال نے بیچ میں آکر مجھے ایوان سے باہر لائے اور خورشید شاہ کےچیمبر  میں لے  آئے۔ جھگڑاکرنے والا شخص وزیراعظم شاہد خاقان عباسی کا بیٹا ہےجس کانام عبداللہ عباسی ہے جسے پروٹوکول کے حصارمیں باہر لے جایا گیا۔ بعد ازاں ایوان بالا کے باہر پاکستان پیپلز پارٹی اور ن لیگ رہنما ایک فوسرے کے خلاف نعرے بازی کرتے رہے

شاید آپ یہ بھی پسند کریں مصنف سے زیادہ

%d bloggers like this: