قومی اسمبلی میں شاہ محمود قریشی اور محمود خان اچکزئی میں تکرار

قومی اسمبلی کے اجلاس میں فاٹا کے حوالے سے بحث کے دوران شاہ محمود قریشی نے ڈپٹی سپیکر مرتضیٰ جاوید عباسی سے بولنے کا وقت مانگا لیکن انہوں نے مائیک محمود خان اچکزئی کو دے دیا ۔ جس پر پی ٹی آئی ارکان اپنی نشستوں پر کھڑے ہوگئے اور شور شرابا شروع کردیا۔پی ٹی آئی ارکان کے ہنگامے پر محمود اچکزئی بھی غصے میں آگئے اور کہا اس طرح کا رویہ نہیں چلے گا، اگر مجھے بات نہ کرنے دی گئی تو کوئی بھی بات نہیں کرے گا۔ماحول میں بڑھتی ہوئی گرمی دیکھ کر ڈپٹی سپیکر نے قومی اسمبلی کا اجلاس غیر معینہ مدت تک کیلئے ملتوی کردیا

شاید آپ یہ بھی پسند کریں مصنف سے زیادہ

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.