14 نومبر،دنیا بھر میں ذیابیطس سے بچائو کا عالمی دن

عالمی ادارہ صحت کی رپورٹ کے مطابق دنیا بھر میں ذیابیطس کے مریضوں کی تعداد 41کروڑ سے تجاوز کر چکی ہے جو2040تک 64کروڑ تک پہنچ جائے گی۔ دنیا بھرمیں اموات کا باعث بننے والی 10بیماریوں میں سے ذیابیطس کا چھٹا نمبر ہے ،پاکستان میں ہر تیسرا شخص ذیابیطس میں مبتلا ہے اور سالانہ 80ہزار سے زائد افراد ذیابیطس اور اس سے متعلقہ بیماریوں کے باعث موت کے منہ میں جارہے ہیں ،اگر اس بیماری پر قابو نہ پایا گیا تو 2040ء تک پاکستان ذیابیطس کی بیماری کے حوالے سے دنیا کاچھٹا بڑا ملک بن جائے گا ذیابیطس سے آگہی کا عالمی دن آج منایا جارہا ہے ‘ اس سال آگہی مہم میں ذیابیطس سے متاثرہ خواتین کی دوران حمل مشکلات کو توجہ کا مرکز بنایا گیا ہے ۔ ذیابیطس کی ابتدائی سطح پر تشخیص سے علاج اور دیگر بیماریوں سے بچائو ممکن ہے ۔پاکستان میں ذیابیطس کے7کروڑ سے زائد مریضوں کے ساتھ ایشیاء میں پہلے نمبر پر ہونے کے باوجود وفاقی وصوبائی سطح پر ذیابیطس کنٹرول کا کوئی پروگرام نہیں ہے جو کہ لمحہ فکریہ ہے۔ اس دن کی مناسبت سے پاکستان سمیت دنیا بھر میں ذیابیطس سے بچائو کے بارے میں آگاہی فراہم کرنے کیلئے سیمینارز، مذاکرے، مباحثے اور واکس کا اہتمام کیاگیا

شاید آپ یہ بھی پسند کریں مصنف سے زیادہ

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.