قومی کپتان سرفراز احمد نے اعتراف کرتے ہوئے کہا کہ سیریز میں پاکستانی کھلاڑی اچھی کرکٹ نہیں کھیل سکے اور ملنے والے مواقع سے فائدہ بھی نہیں اٹھایا جا سکا ۔

قومی کپتان سرفراز احمد نے کہا اس سیریز سے میں نے بہت کچھ سیکھا اور مستقبل میں جو بھی سیریز کھیلنے کو ملی اس میں ان خامیوں کو دور کرنے کی کوشش کریں گے ۔ سرفراز احمد نے اعتراف کیا کہ ان سے بہت ساری غلطیاں سرزد ہوئیں کیونکہ بطور ٹیسٹ کپتان پہلی سیریز ہی کافی سخت ثابت ہوئی اور یہ بات سمجھ میں آ گئی کہ ٹیسٹ میچ میں کپتانی کرنا آسان نہیں کیونکہ حالات ہر سیشن کے دوران تبدیل ہوتے رہتے ہیں۔ ہیڈ کوچ مکی آرتھر کی طرح سرفراز احمد نے بھی اس بات کو تسلیم کیا کہ پاکستانی ٹیم باؤلنگ کی وجہ سے نہیں بلکہ بیٹنگ کی وجہ سے شکست کھا بیٹھی کیونکہ دونوں مرتبہ اپنے ہدف تک رسائی میں ناکامی کا سامنا رہا ۔اس حوالے سے بات کرتے ہوئے پاکستان کے لیگ سپنر مشتاق احمد اور سابق ٹیسٹ کرکٹر مدثر نذر کا کہنا تھا کہ ٹیسٹ میچز کی شکست کو بھلا کر ون ڈے سیریز پر توجہ مرکوز کر نا ہوگی

شاید آپ یہ بھی پسند کریں مصنف سے زیادہ

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.