مودی سرکار کے جے جوان جے کسان کے دعوے دھرے کے دھرے

ہندوستانی ریاست مہاراشٹر کے شہر ناسیک کے 40 ہزار سے زائد کسان مسلسل پانچ دن سے لانگ مارچ کرتے ہوئے ممبئی پہنچ گئے اوران کا اگلا پڑاؤ مہاراشٹر اسمبلی ہے جہاں گزشتہ 3 روز سے بجٹ پر بحث جاری ہے، کسانوں کا مطالبہ ہے کہ ان سے کیے گئے وعدے پورے کرکے حکومتی قرضے اور بجلی کے بل معاف کئے جائیں۔ کسانوں کا کہنا کہ قرضہ معاف کرائیں گے یا گولی کھائیں گے۔  180 کلو میٹر پیدل چل کر آنے والے کسانوں کے ساتھ ان کے بیوی بچے بھی موجود ہیں، سبھا کے پیش روا کا کہنا ہے کہ اگر ان کے مطالبات پورے کئے جاتے تو یہ کسان اتنی مشکلات اٹھا کر یہاں نہ آتے جبکہ بھارتی انتہا پسند تنظیم شیو سینا نے بھی کسان احتجاج کی حمایت کردی ہے۔ دوسری جانب کسانوں کے احتجاج کے باعث ممبئی شہرکی سڑکیں بلاک ہوگئیں اورمیلوں لمبی گاڑیوں کی قطاریں لگ گئیں جس سے ٹریفک کا نظام درہم برہم ہوگیا ۔

شاید آپ یہ بھی پسند کریں مصنف سے زیادہ

%d bloggers like this: