بھوک ہڑتال کرنے والے فلسطینی قیدیوں کا کڑا امتحان

حکمراں جماعت ’لیکوڈ‘ سے تعلق رکھنے والے اسرائیلی وزیر نے فلسطینی اسیران کی اجتماعی بھوک ہڑتال پر کڑی تنقید کی اور کہا کہ فلسطینی اسیر لیڈر مروان البرغوثی نے بھوک ہڑتال شروع کی ہے اور کہا ہے کہ اسیران کو سہولیات فراہم کی جائے۔ میں کہتا ہوں کہ فلسطینی قیدیوں کو سہولیات کے بجائے پھانسی دی جائے۔ ان کے مطالبات کا صرف ایک ہی حل ہے اور وہ سزائے موت ہے۔ یسرائیل کاٹز نے کہا کہ فلسطینی اسیران کو پھانسی کی سزا دینے کے قانون کو فعال کرنا ضروری ہے۔ خیال رہے کہ اسرائیل میں قیدیوں کو پھانسی کی سزا پرعمل درآمد نہیں کیا جاتا تاہم قیدیوں کو طویل مدت قید کی سزائیں سنائی جاتی ہیں۔

شاید آپ یہ بھی پسند کریںمصنف سے زیادہ

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.