سعودی عرب :شہزادوں کی جیل بننے والا ہوٹل عوام کیلئےکھول دیا گیا

سعودی عرب : سعودی حکام کے مطابق بیشتر شہزادوں، اعلیٰ حکام اور امیر افراد کے ساتھ سمجھوتے طے پا گئے ہیں تاہم پراسیکیوٹر جنرل آفس کے مطابق 56 افراد ابھی تک حراست میں ہیں جنہیں ہوٹل سے کسی دوسرے مقام پر منتقل کردیا گیاہے۔واضح رہے کہ سعودی عرب میں یہ ہائی پروفائل گرفتاریاں ولی عہد شہزادہ محمد بن سلمان کی سربراہی میں بننے والی انسداد بدعنوانی کمیٹی کے قیام کے بعد کی گئیں اور ان میں سے زیادہ تر کو خطیر رقم کے بدلے کی گئی ڈیل کےتحت رہا کر دیا گیا ہے۔

 

شاید آپ یہ بھی پسند کریںمصنف سے زیادہ

%d bloggers like this: